HomePAKISTAN72 سالہ شخص نے21سال بیوی کے تابوت کے ساتھ گزانے کے بعد...

72 سالہ شخص نے21سال بیوی کے تابوت کے ساتھ گزانے کے بعد آخری رسومات ادا کر دی


بنکاک(ویب ڈیسک) تھائی لینڈ میں ایک 72 سالہ شخص نے اپنی مردہ بیوی کی باقیات کے ساتھ دو دہائیوں سے زیادہ کا عرصہ گزارنے کے بعدآخری رسومات ادا کر دیں۔ 72 سالہ چارن جانواچکل نے آخر کار اپنی بیوی کو 30 اپریل کو الوداع کیا جس کی موت 2001 میں ہوئی تھی ۔72 سالہ جانواچکل نے اپنی شریک حیات

کی لاش اپنے پاس ایک چھوٹے سے کمرے میں رکھی تھی ۔جانواچکل کا دعویٰ تھا کہ اس کی شریک حیات ابھی تک زندہ ہے اور وہ ان سے باتیں بھی کرتی ہے۔میڈیا رپورٹس کے مطابق جانواچکل کی بیوی کا تابوت گھر سے جب آخری رسومات کے لیے لےجا یا جا رہا تھا اس وقت بھی وہ تابوت سے باتیں کر رہے تھے۔ وڈیو میں سنا جاسکتا ہے کہ جاانواچکل تابوت سے مخاطب ہو کر کہتے ہیں کہ آپ کو مختصر وقت کے لیے گھر سے لے کر جا رہا ہوں ۔ وعدہ کرتا ہوں کہ یہ دورانیہ طویل نہیں ہو گا ۔ جلد آپ کو گھر واپس لے آؤں گا۔ رپورٹس کے مطابق فلاحی ادارے کے ورکرز نے خستہ حال مکان سے ٹوٹے ہوئے تابوت کو نکالا، جس کے ارد گرد پلاسٹک کے تھیلوں اور دیگر کوڑے کے ڈھیر تھے۔رپورٹ کے مطابق 72سالہ شخص کے خلاف کوئی قانونی کارروائی نہیں کی گئی کیونکہ اس نے اپنی بیوی کی موت کو حکام کے پاس درج کرایا تھا۔ واضح رہے کہ مسٹر جانواچکل کی بیوی کی موت 2001 میں ہوئی تھی۔خبروں کے مطابق مسٹر جانواچکل خود فلاحی ادارے کے پاس آخری رسومات میں مدد کے لیے پہنچے کیونکہ انہیں خدشہ تھا کہ ان کی مردہ بیوی ان کی موت کے بعد آخری رسومات سے محروم رہ جائیں گی ۔انڈیپنڈنٹ نے رپورٹ کیا کہ مسٹر جانواچکل پڑھے لکھے ہیں اور انہوں نے کئی ڈگریاں حاصل کی ہیں۔ لیکن ان کے گھر میں کافی عرصے سے بجلی نہیں تھی ۔ 72 سالہ شخص نے انکشاف کیا کہ وہ اپنی بیوی اور دو بیٹوں کے ساتھ رہتے تھے تاہم ان کے بیٹوں نے گھر چھوڑ دیا کیونکہ وہ اپنی ماں کی لاش کے ساتھ گھر میں نہیں رہنا چاہتے تھے۔



Source link

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here

close